کھرا سچ

AGHA-WAQAR-AHMED

:لاہور

آج پاکستان مسلم لیگ ن کے قائم مقام صدر میاں شہباز شریف نے پریس کانفرس میں جس طریقے کے ساتھ مسلم لیگ کے مقدمے کو عوام کے سامنے رکھا اور ایک ایک کر کے پی ٹی آئی کے ایسے بیانیے جو جھوٹ پر مبنی تھے ان کی تفصیل دی اور اس کے ساتھ اپنے پاس موجود وہ دستاویزات  میڈیا سے شیئر کیں جس کو دیکھ کر احساس ہوتا تھا کی یہ وہ پاکستان مسلم لیگ نہیں ہے کہ جس کے سرپرست نواز شریف تھے۔

آج پاکستان مسلم لیگ  ن میں ایک نئی روح  پھونک دی گئی جس کا احساس شہباز شریف کے چند الفاظ سے ہوتا ہے کہ انہوں نے نا صرف یہ مقدمہ میڈیا کے سامنے رکھا بلکہ انہوں نے اپنے اوپر لگائے ہوئے الزامات کا جواب بھی بڑی تفصیل سے دیا اور جس شخص کے متعلق پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان صاحب کہتے ہیں کہ سبحان، انہوں نے ان کی وضاحت کی ۔ اس کے بعد چیف جسٹس پاکستان کو اپیل کی کہ آپ اس مقدمے کو خود دیکھیں اور اس کے ساتھ انہوں نے واضع طور پر کہا کہ مجھے پاکستان کی تمام عدلیہ پر مکمل اعتماد ہے اور وہ جو فیصلہ کریں گے میں وہ من و عن  قبول کروں گا کیونکہ ایک عدالت جس میں سب نے پیش ہونا ہے وہ خداوندی کریم کی عدالت ہے جس میں   روزِمحشر سب نے جانا ہے۔  اُس کے بعد دوسری عدالت عوام کی عدالت ہے جس میں ہم سب جاتے ہیں اور جائیں گے  اور  یقیناََ وہ عدالتِ اعلٰی اور عدالتِ عظمٰی یہاں پر موجود ہے وہ اس کیس کا خود ہی فیصلہ کریں اور جھوٹ کا جھوٹ  صاف ظاہر ہو رہا ہے جس کے متعلق وہ تفصیل دیکھ کر فیصلہ کریں  کہ جھوٹا کون ہے ۔ میں میاں محمد شہباز شریف یا چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان صاحب پھر جو بھی عدالتِ عظمٰی فیصلہ کرے گی اُسے میں بھی تسلیم کروں گا اور عمران خان کو بھی تسلیم کرنا ہو گا۔

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here