جب چاہوں زرداری کو اپنے ایک طرف اور عمران کو دوسری طرف بٹھا سکتا ہوں، طاہرالقادری

Whenever i wants Zardari and Imran can sit by my side together, Tahir-ul-Qadri
Whenever i wants Zardari and Imran can sit by my side together, Tahir-ul-Qadri

:لاہور

پاکستان عوامی تحریک (پی اے ٹی) کے سربراہ ڈاکٹر طاہرالقادری کا کہنا ہے کہ وہ  جب چاہیں اپنے ایک طرف آصف علی زرداری اور دوسری طرف عمران خان کو بٹھا کر دکھاسکتے ہیں۔

پاکستان عوامی تحریک کے زیر اہتمام وکلاء کنونشن سے خطاب میں ڈاکٹر طاہر القادری کا کہنا تھا کہ ‘جب وقت آیا وہ تمام جمہوری قوتوں کو اکٹھا کرکے دکھائیں گے’۔

طاہر القادری نے یہ بیان ایک ایسPATے وقت میں دیا ہے جب پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری اور پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان نے حال ہی میں لاہور میں ڈاکٹر طاہرالقادری سے ملاقات کی اور ماڈل ٹاؤن انکوائری رپورٹ پر عوامی تحریک کے موقف کی حمایت کی یقین دہانی کروائی۔

طاہر القادری کا کہنا تھا کہ ‘جون 2014 میں انسانیت کا قتل عام کیا گیا، معاشرے کا ہر فرد حرمتِ انسانیت کا انتقام لے گا، احتجاج کا آپشن کھلا ہے’۔

کنونشن میں وکلاء رہنماؤں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ‘جسٹس باقر نجفی کمیشن رپورٹ کے ہر صفحے پر خون کے چھینٹے ہیں، ماڈل ٹاؤن پر ظلم کرنے والے کسی معافی کے مستحق نہیں، جہاں نظامِ عدل نہ ہو وہاں ریاستیں نہیں چلتیں’۔

وکلاء کنونشن میں ایک قرارداد بھی منظور کی گئی جس میں مطالبہ کیا گیا کہ وزیراعلیٰ پنجاب شہباز شریف اور صوبائی وزیر قانون رانا ثناء اللہ خود مستعفی ہو جائیں۔

مزید کہا گیا کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن میں ملوث پولیس افسران اور بیوروکریسی کو نوکری سے برخاست کرکے جیلوں میں ڈالا جائے اور اس معاملے پر پاناما طرز کی جے آئی ٹی بنائی جائے۔

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here