مسئلہ کشمیر پر امریکا اثرو رسوخ استعمال کرے اور بھارت کو سمجھائے: شاہ محمود

The US should use influence on Kashmir and convince India: Shah Mahmood
The US should use influence on Kashmir and convince India: Shah Mahmood

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں حالات بگڑتے جا رہے ہیں، امریکا اپنا اثرو رسوخ استعمال کرے اور بھارت کو سمجھائے۔

 وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ بھارت ایل او سی کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے اور مقبوضہ کشمیر میں نہتے لوگوں کو شہید کر رہا ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ اقوام متحدہ کی قرارداد موجود ہے کہ کشمیر متنازع علاقہ ہے، مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق سے متعلق اقوام متحدہ کی رپورٹ بھی سامنے آچکی ہے کہ بھارت خون کی ہولی کھیل رہا ہے۔

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی کشمیر پر ثالثی کی پیشکش کے حوالے سے وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ صدر ٹرمپ نے کشمیر پر ثالثی کی بات خطے کے حالات کو سامنے رکھ کر کی ہے، ٹرمپ کی پیشکش پر اُن کے شکر گزار ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان نے امریکی صدر کی پیشکش پر آمادگی ظاہر کر دی ہے لیکن بھارت کشمیر پر مذاکرات سے کترا رہا ہے۔

ان کا کہنا ہے بھارت کہتا ہے کہ مسئلہ کشمیر دو طرفہ معاملہ ہے لیکن بھارت مسئلہ کشمیر پر دوطرفہ نشست کے لیے بھی تیار نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ بھارت مذاکرات کے لیے آسانی سے نہیں مانے گا، بھارت نے صدر ٹرمپ کی گفتگو پر ہی سوالیہ نشانہ کھڑے کر دیئے ہیں۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ امریکا کے بھارت کے ساتھ خصوصی تعلقات ہیں اور انہیں مراعات بھی خصوصی دی گئی ہیں، امریکا بھارت کو سمجھائے اور اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں معاملات بگڑتے جا رہے ہیں، آج اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کو مراسلہ ارسال کر رہا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ سیکریٹری جنرل اقوام متحدہ میرے مراسلے کا مطالعہ کریں اور سیکیورٹی کونسل کے ممبران کو بھی بھجوائیں۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ہم امن سے رہنا چاہتے ہیں اور اس وقت ہمارا فوکس افغانستان پر ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہمارا افغانستان میں امن کا عمل آگے بڑھ چکا ہے، بھارت افغانستان امن عمل میں رکاوٹیں کھڑی کرتا ہے تو اس سے خطے کا امن متاثر ہو گا۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ بی جے پی کی قیادت واجپائی کے پاس تھی تو انہوں نے اسٹیٹس مین کا کردار ادا کیا تھا۔

ان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان نے منتخب ہونے کے بعد پیغام دیا کہ بھارت ایک قدم بڑھائے ہم دو بڑھائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارا کل بھی امن کا پیغام تھا اور آج بھی ہے، مسئلہ تیزی سے بگڑ رہا ہے، بھارت آئے بیٹھے اور مسئلہ کشمیر کا حل تلاش کرے۔

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here