سینیٹ انتخابات میں ایک ہی پارٹی کونقصان پہنچایا جارہا ہے: مریم اورنگزیب

Senate elections are being harm to the same party by Maryam Aurangzeb
Senate elections are being harm to the same party by Maryam Aurangzeb

:اسلام آباد

وزیر مملکت برائے اطلاعات مریم اورنگزیب کا کہنا ہےکہ سینیٹ انتخابات میں بھی ایک ہی پارٹی کونقصان پہنچایا جارہا ہے اور  پہلے سے ہی مقصد تھا کہ سب سے بڑی جماعت کو توڑا جائے۔

اسلام آباد میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مریم اورنگزیب نے کہا کہ عمران خان انسداد دہشت گردی کی عدالت سے مفرور رہے، انہوں نے آج پہلی دفعہ درخواست دی اور انہیں استثنیٰ دیا گیا، پارلیمنٹ پر حملہ اور غیر پارلیمانی الفاظ استعمال کرنیوالوں سے پوچھ گچھ نہیں۔

انہوں نے کہا کہ ایک شخص جوعدالت نہیں آتا، پارلیمنٹ پرحملہ کرتا ہے اسے استثنیٰ دے دیا جاتا ہے، وہ جوعدالت میں پیش ہوتے ہیں، انہیں بیمار ماں اور بیمار بیوی سےملنے نہیں دیا جاتا، ایسے فیصلوں سے سوالات تو اٹھتے ہیں اور بہت سارے سوالات اٹھ رہے ہیں۔

مریم اورنگزیب نے کہا کہ سینیٹ انتخابات میں بھی ایک ہی پارٹی کونقصان پہنچایا جارہا ہے، سینیٹ کے تمام امیدواروں کو آزاد کردیا جائے تو اکثریت مسلم لیگ (ن) کی ہوگی، پہلے سے ہی مقصد تھا کہ سب سے بڑی جماعت کو توڑا جائے، پارٹی توڑنے اور سینیٹ الیکشن سے باہر کرنے کی کوششیں ناکام ہوئی ہیں، پارٹی متحد ہے اور کوئی باہر نہیں گیا۔

ان کا کہنا تھا کہ پارٹی صدارت کے لیے سی ای سی اجلاس میں نام پیش کردیاجائے گا، شہباز شریف بہترین امیدوار اور ہر اعتبار سے پارٹی صدارت کے لیے موزوں ہیں، مریم نواز کہہ چکیں پارٹی صدرات کیلئے شہبازشریف سے زیادہ کوئی اہل نہیں۔

وزیر مملکت نے کہا کہ ایک شخص جس نے پنجاب میں پراجیکٹ لگائے اسے گرفتار کرلیا جاتا ہے، احدچیمہ کی خدمات نہ صرف پنجاب بلکہ عمران خان کو خود پتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ جس نے قومی پیسے بچاکر منصوبے مکمل کیے اس پر تنقید ہوتی ہے، جہاں احتساب کمیشن تالے لگے ہیں وہاں کون دیکھے اور پوچھے گا؟ کرپشن ثابت ہوگی تو قانون کے مطابق اقدامات کریں، پنجاب حکومت کے پاس تمام منصوبوں پر خرچ پیسے کا ثبوت ہے۔

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here