عدلیہ ہو فوج یا پارلیمنٹ، اداروں کے ساتھ مل کر چلنا ہے،حمزہ شہباز

Hamza says necessary to move forward hand-in-hand with all institutions
Hamza says necessary to move forward hand-in-hand with all institutions

:سرگودھا

پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما حمزہ شہباز نے کہا ہے کہ عدلیہ ہو، فوج یا پارلیمنٹ، ہمیں اداروں کے ساتھ مل کر چلنا ہے، مل کر چلیں گے تب ہی عوام کا بھلا ہوگا۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے سرگودھا میں ایک تقریب سے خطاب کے دوران کیا۔

حمزہ شہباز نے کہا کہ ذوالفقار علی بھٹو نے ایٹمی منصوبے کی بنیاد رکھی اور نواز شریف نے ایٹمی دھماکے کیے، اس لیے آج کوئی ملک کی طرف میلی آنکھ سے نہیں دیکھ سکتا۔ حمزہ شہباز نے کہا کہ ملکی ترقی کے لیے ایل این جی کے منصوبے لگائے، چین جیسے دوست نے ہمارا ساتھ دیا۔

میٹرو بس منصوبے پر تنقید کے تناظر میں انھوں نے کہا کہ جنگلہ بس کہنے والوں کو آج پانچ سال کے بعد پشاور میں جنگلہ بس بنانے کا خیال آیا، یہ جمہوریت کی جیت ہے۔ لوگ کہتے ہیں ہماری باری آنے دو، چھوڑو باریوں کو پاکستان کی ترقی کی باری آنے دو۔

کشمیر میں حالیہ بھارتی بربریت پر اظہار خیال کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ کل کشمیر میں شہادتیں ہوئیں، یہ سلسلہ کئی دہائیوں سے چل رہا ہے۔

عوام سے مخاطب ہوتے ہوئے انھوں نے کہا کہ الیکشن آنے والا ہے، میں نہیں کہتا مسلم لیگ ن کو ووٹ دیں، نہیں کہتا پیپلز پارٹی یا پھر پی ٹی آئی کو ووٹ دیں، صرف پاکستان کو ووٹ دیں۔ فیصلہ آپ نے کرنا ہے، لیکن کبھی لمبی لمبی تقریروں پر دھیان نہیں دیں بس کام کو مدنظر رکھیں۔

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here