قصور سے چھٹی جماعت کے بچے کی لاش برآمد

dead body found of missing child
dead body found of missing child

:قصور

تحصیل پتوکی سے چھٹی جماعت کے طالب علم کی لاش برآمد ہوئی ہے۔

گزشتہ روز قصور میں 7 سالہ بچی زینب کی لاش کچرا کنڈی سے برآمد ہوئی جسے زیادتی کے بعد قتل کیا گیا۔

زینب کے قتل کی لرزہ خیز واردات کے بعد شہر بھر میں احتجاج جاری ہے اور حالات بدستور کشیدہ ہیں جب کہ پنجاب حکومت نے واقعے کی تحقیقات شروع کردی ہیں۔

نجی نیوز چینل کے مطابق قصور میں ایک اور کمسن کو قتل کیے جانے کا واقعہ رونما ہوا ہے جہاں تحصیل پتوکی سے چھٹی جماعت کے طالب کی لاش ملی ہے۔

نمائندہ کے مطابق چھٹی جماعت کا طالب علم شرق عرف بوبی تین روز قبل اسکول جاتے ہوئے اغوا ہوا تھا، بچے کے اغوا ہونے کی اطلاع اس کے والدین نے جب پولیس کو دی تو پولیس نے رشتے داروں میں تلاش کرنے کا کہا اور کوئی کارروائی نہیں کی۔

نمائندہ نے بتایا کہ بچے کی لاش آج نواحی گاؤں ڈھولن چک نمبر 27 میں کسانوں کو کھیتوں سے ملی جس کی اطلاع انہوں نے پولیس کو دی۔

پولیس نے بچے کی لاش تحویل میں لے کر اسے پوسٹ مارٹم کے لیے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر اسپتال پتوکی منتقل کردیا ہے۔

ذرائع کا بتانا ہے کہ بچے کی گردن پر نشانات پائے گئے ہیں جس سے اسے گلا دبا کر قتل کیے جانے کا شبہ ظاہر کیا جارہا ہے۔

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here