چیف جسٹس ثاقب نثار کی کامیاب انجیوپلاسٹی، حالت خطرے سے باہر

CJP
CJP

چیف جسٹس ثاقب نثار کی کامیاب انجیوپلاسٹی، حالت خطرے سے باہر

راولپنڈی:  چیف جسٹس پاکستان جسٹس میاں ثاقب نثار کو سینے میں تکلیف کے باعث راولپنڈی کے مقامی اسپتال لایا گیا جہاں ان کی انجیو پلاسٹی کی گئی۔

ذرائع کے مطابق  چیف جسٹس ثاقب نثار کو سینے میں درد کے باعث فوری طور پر راولپنڈی انسٹیٹوٹ آف کارڈیالوجی لایا گیا جہاں ان کی انجیو پلاسٹی کر کے ان کے دو اسٹنٹ ڈالے گئے۔

ذرائع کے مطابق ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ چیف جسٹس کی حالت خطرے سے باہر ہے اور ان کی ایک بند شریان کھول دی گئی ہے تاہم ان کے اسپتال سے واپس گھر جانے کا فیصلہ ڈاکٹرز کا بورڈ کرے گا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ چیف جسٹس پاکستان نے آپریشن کے بعد گفتگو بھی کی اور ان کی حالت بہتر ہے۔

سپریم کورٹ کے سینئر جج جسٹس آصف سعید کھوسہ بھی راولپنڈی انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی پہنچے جہاں انہوں نے چیف جسٹس کی خیریت دریافت کی۔

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here