دھرنے ختم کرانے کیلئے معاہدہ: شیریں مزاری اپنی ہی حکومت پر برس پڑیں

Shereen Mazari
Shereen Mazari

دھرنے ختم کرانے کیلئے معاہدہ: شیریں مزاری اپنی ہی حکومت پر برس پڑیں

وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق شیریں مزاری نے خون خرابے سے بچنے کے لیے مطمئن کرنے کی پالیسی کو غیر ریاستی عناصر کے لیے خطرناک پیغام قرار دیدیا۔

سپریم کورٹ کی جانب سے آسیہ بی بی کی بریت کے فیصلے کے خلاف مذہبی تنظیموں کی جانب سے ملک بھر میں احتجاج کیا گیا اور دھرنے دیئے گئے۔

جمعے کے روز ملک بھر میں احتجاج کے باعث مرکزی شاہراہیں بند اور ٹرین سروس معطل رہی جس کے باعث شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑا۔

وفاقی اور پنجاب حکومت کی جانب سے دھرنے ختم کرنے کے لیے تحریک لبیک پاکستان کی قیادت کے ساتھ مذاکرات کیے گئے اور دونوں فریقین کے درمیان ایک 5 نکاتی معاہدہ طے پایا جس کے بعد احتجاج ختم کیا گیا۔

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری نے گزشتہ روز برطانوی نشریاتی ادارے کو انٹریو کے دوران دھرنے ختم کرانے کے لیے مذاکرات کو عارضی حل قرار دیتے ہوئے کہا کہ پرتشدد احتجاج کے خاتمے کے لیے مستقل حل نکالنا ہو گا۔

شیریں مزاری نے بھی اپنی حکومت کی جانب سے تحریک لبیک کے ساتھ کیے گئے معاہدے کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔

وفاقی وزیر نے سوشل میڈیا پر اپنے ٹوئٹ میں لکھا کہ خون خرابے سے بچنے کیلئے مطمئن کرنے کی پالیسی غیر ریاستی عناصر کیلئے خطرناک پیغام اور پُر امن جمہوری احتجاج کے حق کے تصور کو متاثر کرتا ہے۔

انہوں نے مزید لکھا کہ کہ ریاست کو قانون کی عمل داری قائم کرنی چاہیے اور اداروں کے ساتھ کھڑا ہونا چاہیے، بالخصوص جب انہیں نشانہ بنایا جا رہا ہو۔

شیریں مزاری نے کہا مجھے امید ہے کہ وزیراعظم عمران خان نہ صرف موجودہ حالات بلکہ جبری گمشدگیوں پر بھی قانون کی پاسداری کے عزم پر قائم رہیں گے۔

Shireen Mazari

@ShireenMazari1

Appeasement to “avoid bloodshed” sends a dangerous msg to non-state actors & undermines the very concept of democratic peaceful protest. The State has to enforce Rule of Law, Constitution & stand by state institutions esp when they are targeted.

Shireen Mazari

@ShireenMazari1

It is unfortunate we don’t study history – appeasement historically never works as Chamberlain’s Munich appeasement towards Nazis showed. Appeasement to avoid “bloodshed” in a war-weary Europe led to massive bloodshed & destruction in the form of WW II.

Shireen Mazari

@ShireenMazari1

& despite sceptics & beyond despondency I trust PM Khan to deliver on his commitment to Rule of Law, Constitution & defence of state institutions as well as to human rights guaranteed in Constitution – not just in present situation but also on issues like Enforced Disappearances

Shireen Mazari

@ShireenMazari1

Appeasement to “avoid bloodshed” sends a dangerous msg to non-state actors & undermines the very concept of democratic peaceful protest. The State has to enforce Rule of Law, Constitution & stand by state institutions esp when they are targeted. #IStandWithSupremeCourt https://twitter.com/ShireenMazari1/status/1058960406625075201 

جواب چھوڑ دیں

Please enter your comment!
Please enter your name here